QAISAR BARHAVI – قیصر بارہوی

قیصر بارہوی

نام سید قیصر عباس زیدی المعروف قیصر بارہوی 16 جنوری 1928 کو بارہہ کی ایک بستی کیتھوڑا میں پیدا ہوئے۔ والد سید وزارت حسین زیدی کے زیرِ تربیت ابتدائ تعلیم پای ۔ گیارہ برس کی عمر  میں لکھنو آۓ اور 1950 تک وہاں مقیم رہ کر مغربی تعلیم کے ساتھ علومِ مشرقی کی تحصیل بھی کی۔

علم عروض بھی پایا ۔ 1938 میں شاعری کی ابتدا کی ۔شاعری میں نجم آفندی سے متاثر تھے ۔ 1950 میں پاکستان آ گئے ۔ اور گورنمنٹ کی ملازمت اختیار کی ۔پنجاب کے مختلف حصوں میں رہے تاہم  1969 سے مستقل لاہور میں قیام رہا ۔

لکھنو کے زمانے سے ہی غزل ، سلام ، قصیدے اور رباعیات کہیں البتہ مکمل مرثیہ 1952 میں کہا ۔انتدائ سات مرثیوں کا مجموعہ شبابِ فطرت شائع ہوا ۔اور جلس ہی اس زود گو شاعر نے مرثیہ گوئ کے حوالے سے ملک گیر شہرت پا لی ۔ انکی کتب میں موج شہر ، شباب فطرت ، عظیم مرثیے شامل ہیں۔

جناب قیصر بارہوی نے 26 دسمبر 1996 میں کراچی میں وفات پائ

 مراثئ قیصر بارہوی

آشوب عصر

ASHOB E ASR

اعجاز تحمل

AIJAZ E TAHAMMUL

انسان اور کربلا

INSAN AUR KARBALA

آیات آمنہ

AAYAT E AMNA

بے ثباتی عالم

BESABATI E AALAM

پیکر عظمت

PEKAR E ISMAT

جہاد زینب

JEHAD E ZAINAB

حسین اور انتخاب

HUSSAIN AUR INTEKHAB

در یتیم

DURR E YATEEM

سبطین مرتضی

SIBTAIN E MURTAZA

سید مسموم

SYED E MASMOOM

شام غریباں

SHAM E GHAREEBAAN

شہر معلا

SHEHR E MOALLA

صبح مودت

SUBH E MOADDAT

عباس نامدار

ABBAS E NAMDAAR

عزت وجود

IZZAT E WAJOOD

عرفان امامت

IRFAN E IMAMAT

عرفان حیات

IRFAN E HAYAT

عروج عالم نسواں

UROOJ E AALAM E NISWAAN

عشق حسین

ISHQ E HUSSAIN

عظمت فن

AZMAT E FANN

علم علی

ILM E  ALI

علم غیب اور محمد و آل محمد

ILM E GHAIB AUR MUHAMMAD WA AAL E MUHAMMAD

کربلا و نجف

KARBALA O NAJAF

کعبہ و محافظین کعبہ

KABA O MUHAFIZEEN E KABA

مدح ابوطالب

MADH E ABUTALIB

مظلومیت

MAZLOOMIAT

معراج بشر

MERAJ E BASHAR

معراج وفا

MAIRAJ E WAFA

معصومہ کربلا

MASOOMA E KARBALA

نظام اسلام

NIZAM E ISLAM

نماز دل

NAMAZ E DIL

نواۓ احساس

NAWA E EHSAS

یتیمان مسلم

YATEEMAN E MUSLIM

یوسف حسین

YOUSUF E HUSSAIN

 

 

 

TOTAL MARSIYAS = 35

Total Page Visits: 2563 - Today Page Visits: 3

eMarsiya – Spreading Marsiyas Worldwide